Breaking News

استری کا تار بار بار جل جاتا ہے یا آگ نکلنے لگتی ہے ۔۔ اپنی استری میں آپ بھی بس یہ سیٹننگ کرلیں، بجلی کا بل بھی کم اور استری بھی ہو فٹافٹ

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)استری ہر گھر کی بنیادی ضروریات میں سے ایک ہے۔ اگر یہ کہا جائے کہ استری ہماری شخصیت کو بدلنے میں اہم کردار ادا کرتی ہے کیونکہ سلوٹ والے کپڑے پہن کر کوئی بھی باہر نکلنا پسند نہیں کرتا بہرحال استری میں بھی کئی قسم کے مسائل نکل آتے ہیں۔ کبھی تار جل جاتا ہے تو کبھی ستری فُل سپیڈ پر ہونے کے باوجود بھی گرم نہیں ہوتی کہ جلدی کپڑوں کی سلوٹیں مٹا سکے۔ کبھی استری کرنے کی وجہ سے بل اتنا زیادہ آتا ہے کہ انسان حیران رہ جاتا ہے اتنے تو کپڑے نہیں جتنا بل آگیا۔

اگر آپ بھی انہیں مسئلوں کا شکار ہیں تو بس ستری کی یہ سیٹنگ کرلیں تاکہ بجلی کے اضافی سے بچ سکیں۔ استری کو چار منٹ کے لئے تیز گرم کریں، اور جلد سے جلد کپڑوں پر پھیر لیں اس طرح یونٹ کا استعمال بھی کم ہوگا اور بجلی کا بل بھی بچے گا اور کپڑے بھی کم ہی وقت میں استری ہو جائیں گے۔ آپ نے دیکھا ہوگا کہ جب کسی شنگھائی والے یا دھوبی کی دکان پر جائیں تو وہ ایک بڑی بھاری سی لوہے کی استری سے کپڑوں کو استری کرتا ہے اور اس کی استری بھی اچھی ہوتی ہے، جلدی سلوٹیں نہیں آتی ہیں۔ ایسی ہی ایک گیس کی استری آپ بھی خرید لیں، اس سے ایک فائدہ تو یہ ہے کہ بجلی کے بل کا خرچہ بچے گا اور دوسرا یہ کہ گیس کی استری جلدی ہی گرم ہو جاتی ہے یہ گیس کے بل میں محض 3 فیصد ہی اضافہ کرتی ہے، وہ بھی اس صورت میں جبکہ آپ ایک مہینے کے اندازً 16 گھنٹے استری کریں تو۔ اس حساب سے ایک عام گھریلو صارف کا بل 5۔1 فیصد بڑھے گا۔

لوڈ شیڈنگ تو ملک بھر میں ہوتی ہی رہتی ہے، ایسے میں آپ لائٹ جانے کا فائدہ بھی اٹھا سکتی ہیں، چولہا گرم کریں، اس پر توا رکھیں اور استری کو کچھ دیر اس گرم توے پر رکھ کر گرم کریں اور استری کرلیں۔ یا اگر آپ کو کاٹن کے کپڑے استری کرنےہیں تو آپ توے کی مدد سے گرم استری کرکے استعمال کرلیں، اور سادے واشنگ ویئر کپڑوں کو استری کرتے وقت استری کو آن کرلیں۔ لان کے کپڑے گرمی میں زیادہ استعمال ہوتے ہیں، اس لئے ان کو استری اگر آپ نہ کریں اور ہلکا سا گیلا کرکے پہن لیں تو بجلی کا بل بھی بچے گا اور آپ گرمی سے بھی بچیں گے۔ اس کے علاوہ آپ ایک اور کام کریں کہ استری کو صبح سویرے کریں، اس وقت گھر میں بجلی کا لوڈ زیادہ نہیں ہوتا، استری جلدی گرم ہوجائے گی اور یونٹس بھی اضافی استعمال نہیں ہوں گے۔

About admin

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *